66

کراچی مین دوسری اسٹریٹ لائبریری قائم ۔کمشنر کراچی نے افتتاح کیا

کراچی میں دوسری اسٹریٹ لائبریری قائم کر دی گئی کمشنر کراچی افتخار شالوانی نے یوم آزادی کے موقع پر ء دوسری اسٹریٹ لائبریری کا افتتاح کیا۔ اس موقع پر ۔ڈی ایم سی جنوبی کے چیئرمین ملک محمد فیاض اعوان، وائس چانسلر شہید بے نظیر بھٹو یونیورسٹی اختر بلوچ، لیاری کے دانشور رمضان بلوچ، اور دیگر بھی موجو د تھے۔
۔ دوسری اسٹریٹ لائبریری جو ملک کی بھی دوسری اسٹریٹ لائبریری ہے ضلعی بلدیہ جنوبی کے تعاون سے قائم کی گئی ہے۔ افتتاحی تقریب سے خطاب کر تے ہوئے کمشنر کراچی نے کہا کہ کراچی میں عام افراد کی کتابوں تک رسائی کوآسان بنانے اور مطالعہ کو فروغ دینے کے مقصد سے کراچی انتظامیہ کی شروع کی جانے والی یہ کوشش جاری رہے گی دیگر مقامات پر اسٹریٹ لائبریریاں قائم کی جائیں گی۔ نارتھ ناظم آباد،میں ایک لائبریری کی تعمیر شروع کر دی گئی ہے اور اس کا سنگ بنیا دبھی انھون نے گذشتہ دنوں رکھ دیا ہے۔ گارڈن اور ملیر میں بھی لائبریریوں کے قیام کے لئے اقدامات کئے گئے ہیں ۔ کمشنر نے کہا اسٹریٹ لائبریری کے اقدام کو شہریوں نے پسند کیا ہے کراچی انتظامیہ کی جانب سے کمشنر کارنر پر قائم کی گئی لائبریری کو معاثرہ کے ہر طبقہ نے سراہا ہے ۔ چیف سیکریٹری سندھ ممتاز علی شاہ نے پہلی اسٹریٹ لائبریری کا افتتاح کیا تھا ۔ انھوں نے کہا کہ کتابوں کی آج بھی بہت اہمیت ہے انٹرنیٹ کے دور کے باوجود کتابوں کی آج بھی بہت اہمیت ہے انٹر نیٹ کتابوں کا متبادل نہیں انٹر نیٹ سے معلومات ضرور ملتی ہیں لیکن علم کتابوں سے حاصل ہوتا ہے۔انھوں نے کہا کہ لیاری کے لوگوں نے اسٹریٹ لائبریری کا جس طرح خیر مقدم کیا ہے اس سے ان کی کتابوں سے وابستگی اور شوق کا اظہار ہو تا ہے ۔ انھوں نے امید ظاہر کی کہ وہ لیاری کے لوگ لائبریری کی خود دیکھ بھال کریں گے اس سے لیاری کے بچوں کو فایدہ ہوگا لائبریری میں معلومات، ادب تاریخ کتابیں رکھی گئی ہیں اور ان میں مسلسل اضافہ ہوتار ہے گا ۔ انھوںنے روٹری کلب کا شکریہ ادا کیا جنھوں نے پانچ سو کتابوں کا تحفہ دیا اور آئندہ بھی دیں گے ۔ انھوں نے لوگوں سے کہا کہ ضلعی بلدیہ جنوبی لائبریری کی نگرانی کرے گی اور لائبریری کو کامیاب بنانے کے لئے ضروری اقدامات کرے گی اس سلسلہ میں لیاری کے نوجوانوں سے رابطہ رکھے گی اور مشاورت سے اقدامات کر ے گی
۔ڈی ایم سی جنوبی کے چیئرمین ملک محمد فیاض اعوان نے اسٹریٹ لائبریری کے قیام کو ایک اچھی کوشش قرار دیا انھوں نے کہا اس سے لیاری کے نوجوانوں کی مطالعہ کی ضروت بڑھے گی انھیں آسانی سے کتابیں میسر آئیں گی انھوں نے کہا
کہ لیا ری کے لوگ کتابون سے محبت کر تے ہیں ۔ لیاری کے نوجوانو ن کی کتابوں سے وابستگی ان کی روایت کا حصہ ہے ۔ لایبریری کو بہتر بنانے کے لئے ہر ممکنہ اقدامات کئے جائیں گے،

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں