25

مصباح الحق سے قبل مجھے ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر کی آفر تھی، راشد لطیف کا دعوی

سابق کپتان راشد لطیف کا دعویٰ ہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) نے انھیں مصباح الحق کی تقرری سے قبل ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر بنانے کا فیصلہ کرلیا تھا ، چیف ایگزیکیٹو آفیسر پی سی بی وسیم خان سے تمام امور طے پاگئے تھے لیکن معاہدے کے فائنل ہونے کے موقع چئیرمین پی سی بی احسان مانی نے منظوری نہیں دی، بصورت دیگر آج مصباح کے بجائے وہ ہیڈ کوچ ہوتے، راشد کا کہنا ہے کہ احسان مانی غالبا مالی امور پر مطمئن نہ تھے اس وجہ سے انھوں نے منظوری نہیں دی، ان خیالات کا اظہار انھوں نے ایک نجی ٹی وی چینل سے بات چیت کرتے ہوئے کیا، واضح رہے کہ 90ءکی دھائی میں اپنا کیرئیر داﺅ پر لگاکر میچ فکسنگ اور اسپاٹ فکسنگ کو بے نقاب کرنے والے غیر معمولی وکٹ کیپر و بیٹسمن راشد لطیف ملک کی ڈومیسٹک کرکٹ کی جڑوں میں اترے ہوئے ہیں، کرکٹ ماہرین کا کہنا ہے کہ اگر ایک سال قبل راشد لطیف کو ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر مقرر کردیا جاتا تو آج قومی کرکٹ ٹیم اتنی بدحالی کا شکار نہ ہوتی۔

۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں